0
Wednesday 1 Apr 2020 11:27
گزشتہ 24 گھنٹوں میں دنیا بھر میں کورونا سے 1700 سے زائد ہلاکتیں

دنیا میں کورونا متاثرین کی تعداد 7 لاکھ 87 ہزار سے تجاوز، 38 ہزار ہلاکتیں

دنیا بھر کے مسلمان حج کی تیاریاں موخر کر دیں، سعودی حکومت کا انتباہ
دنیا میں کورونا متاثرین کی تعداد 7 لاکھ 87 ہزار سے تجاوز، 38 ہزار ہلاکتیں
اسلام ٹائمز۔ دنیا بھر میں نئے کورونا وائرس سے متاثرین کی تعداد 7 لاکھ 87 ہزار تک پہنچ گئی ہے جبکہ ہلاکتوں کی تعداد 38 ہزار ہو گئی۔ گذشتہ 24 گھنٹوں میں کورونا وائرس سے کم از کم 17سو ہلاکتیں ہوئی ہیں، دوسری طرف اس وائرس کے سبب ہونے والی بیماری کووڈ 19 سے صحت یاب ہونے والے افراد کی تعداد بھی 1 لاکھ 66 ہزار تک پہنچ گئی ہے۔ اس وقت کورونا وائرس سے سب سے زیادہ متاثرہ ملک امریکا ہے جہاں انفیکشنز کی تعداد 1 لاکھ 65 ہزار اور ہلاکتوں کی تعداد 3200 کے قریب ہے، سب سے زیادہ ہلاکتیں اٹلی میں ہوئی ہیں جن کی تعداد 11600 ہے، جرمنی میں متاثرین کی تعداد 67 ہزار جبکہ ہلاکتوں کی تعداد 645 ہے۔ اسپین میں ہلاکتوں کی تعداد 7716 تک پہنچ گئی، اٹلی اور اسپین میں ہلاکتوں کی تعداد مسلسل بڑھ رہی ہے۔ برطانیہ میں اب تک 1408 افراد ہلاک ہوئے، امریکی ریاست نیویارک میں کورونا وائرس سے صورت حال مزید ابتر ہو گئی۔ امریکا میں وبا کو روکنے کیلئے کیے جانے والے اقدامات اور سماجی دوری کی ہدایات 30 اپریل تک نافذ رہیں گی، امریکہ کے بعد اٹلی میں بھی کورونا وائرس کے مریض ایک لاکھ سے زیادہ ہو گئے ہیں۔ ایران میں 31 مارچ کی صبح تک مجموعی ہلاکتوں کی تعداد 2757 تھی، فرانس میں بھی پہلی بار 30 مارچ کو 418 ریکارڈ ہلاکتیں ہوئیں جس کے بعد وہاں بھی ہلاکتوں کی مجموعی تعداد 3 ہزار سے زائد ہوگئی ہے، ادھر سعودی عرب میں کورونا وائرس کے نئے مریض سامنے کے بعد مکہ کے کئی علاقوں کی ناکہ بندی کی جا رہی ہے، آسٹریلیا نے اپنے اقدامات میں مزید سختی کا اعلان کیا ہے۔

برطانیہ کے چیف میڈیکل افسر نے کہا ہے کہ ملک کو دوبارہ اپنی اصل حالت میں آنے کے لیے چھ ماہ لگ سکتے ہیں۔ حکومت قومی ہیلتھ سروس این ایچ ایس کے وسائل میں اضافہ کر رہی ہے، جاپان نے کہا ہے کہ وہ کورونا کا پھیلاؤ روکنے کے اقدامات میں امریکہ، چین، جنوبی کوریا اور برطانیہ سمیت یورپ کے کئی ممالک سے آنے والوں پر پابندی عائد کر رہا ہے۔ جاپانی وزیر ِخارجہ نے کہا ہے کہ 73 ممالک کے شہریوں کی آمد پر پابندی لگائی گئی ہے۔ ملک مں اب تک کورونا کے 1953 مصدقہ مریض ہیں جبکہ 56 ہلاکتیں ہو چکی ہیں۔ بیلجیئم میں کورونا وائرس سے متاثرہ 12 سالہ بچی ہلاک ہوگئی ۔ فرانسیسی خبر رساں ادارے کے مطابق حکومتی ترجمان نے منگل کو بتایا کہ بچی کو گزشتہ 3 دن سے بخار تھا جس کے بعد ٹیسٹ کرنے پر اس میں کووڈ 19 کی تشخیص ہوئی تھی، اتنی کم عمر میں کووڈ 19 سے ہلاکت کا اپنی نوعیت کا پہلا کیس ہے۔ ملک میں اس وقت ہلاکتوں کی کل تعداد 705 ہے۔ روس نے کورونا وبائی مرض میں مبتلا افراد کی تعداد 1836 تک پہچنے کے بعد سرکاری حکم کے مطابق، روس کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے 30 مارچ سے اپنی سرحدیں بند کردے گا۔ زمبابوے میں تین ہفتے کا لاک ڈاؤن نافذکر دیا گیا۔ زمبابوے میں کورونا وائرس سے ایک شخص ہلاک جبکہ 6 مریض رجسٹرڈ ہوئے ہیں، جارجیا میں کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے رات کا کرفیو اور دن کو قرنطینہِ عام نافذ کر دیا گیا۔

کورونا وائرس ک باعث خدشہ ظاہر کیا جا رہا ہے کہ رواں سال فریضہ حج کی ادائیگی نہیں کی جائے گی۔ سعودی وزیر حج و عمرہ ڈاکٹر محمد صالح بن طاہر بنتن نے کورونا وائرس کی وجہ سے پیدا ہونے والی غیر یقینی صورتحال کے باعث مسلمانوں سے حج کی تیاریاں موخر کرنے کا کہا ہے۔ سعودی وزیر حج و عمرہ ڈاکٹر محمد صالح بن طاہر بنتن نے سرکاری ٹی وی الاخباریہ سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ سعودی عرب حج و عمرہ زائرین کی خدمت کے لیے پوری طرح تیار ہے اور سعودی حکومت عازمین عمرہ کو کسی بھی وقت آنے کی اجازت دے سکتی ہے۔ ڈاکٹر محمد صالح بن طاہر بنتن نے کہا کہ کورونا وائرس کے باعث موجودہ حالات کے پیش نظر سعودی حکومت مسلمانوں اور اپنے شہریوں کی صحت و تندرستی کے حوالے سے فکرمند ہے، اس لیے ہم دنیا بھر میں اپنے مسلمان بھائیوں سے کہتے ہیں کہ صورتحال واضح ہونے کا انتظار کریں اور حج معاہدے نہ کریں۔ سعودی حکومت نے پاکستان سمیت تمام مسلم ممالک کی حکومتوں کو حج معاہدے کرنے سے روک دیا ہے جبکہ رواں سال کے شروع میں عمرے کو بھی معطل کردیا ہے اور اس سال حج بھی موقوف ہونے کا خدشہ ہے۔ سعودی عرب میں کورونا وائرس کے 1500 سے زائد کیسز سامنے آچکے ہیں اور 10 افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔ حکومت نے ملک میں لاک ڈاؤن کر دیا ہے اور تمام غیر ملکی پروازیں بھی معطل کردی گئی ہیں۔ 
خبر کا کوڈ : 853978
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش