0
Thursday 2 Apr 2020 16:46

جب آدمی بے حیا ہو جاتا ہے تو پھر اللہ ایسے جھٹکے دیتا ہے، مولانا طارق جمیل

جب آدمی بے حیا ہو جاتا ہے تو پھر اللہ ایسے جھٹکے دیتا ہے، مولانا طارق جمیل
اسلام ٹائمز۔ معروف اسلامی مبلغ مولانا طارق جمیل نے کرونا وائرس کی وباء کو اللہ تعالی کی جانب سے انسانوں کیلئے اطلاع اور امتحان قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ جب آدمی بے حیا ہو جاتا ہے تو پھر اللہ ایسے جھٹکے دیتا ہے، مسلمان اپنی ثقافت سے دور ہو رہے ہیں، فحاشی اور بد کرداری ہماری تہذیب نہیں، وباء تب آتی ہے جب بے حیائی عام ہو، اللہ کے واسطے اپنے کلچر پر واپس آؤ، قوم اسلامی کلچر کو اپنائے۔

نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے مولانا طارق جمیل نے کہا کہ ہم نے اپنے اللہ کو منانا ہے، سب سے آسان طریقہ ہے کہ ہم اللہ کے حضور توبہ کریں، حضرت یونس علیہ اسلام کی دعا کو جاری رکھنا چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ کرونا وائرس سے جان کو خطرہ ہے، نبی ؐ کا حکم واضح ہے کہ تیز بارش کے دوران گھروں میں نماز پڑھیں، مسجد میں نہ آئیں، عوام سے سو فیصد حکومتی ہدایات پر عمل کرنے کی درخواست کروں گا، ہدایات پر سختی سے عمل کیا جائے۔

انہوں نے حدیثوں کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ بخاری شریف میں ہے کہ وبائی مریض سے اس طرح بھاگو جیسے شیر کو دیکھ کر بھاگتے ہیں، جبکہ مسلم شریف کی روایات ہے ایک شخص وبائی مریض تھا تو آپؐ نے اس شخص کیساتھ مصافحہ نہیں کیا تھا۔ مولانا طارق جمیل نے کہا کہ ارباب سیاست سے عرض کرتا ہوں کہ اللہ کے واسطے اپنی پارٹیاں نہ دیکھو، پاکستان دیکھو، اب کو ایک پلیٹ فارم پر اکٹھا ہونا چاہیے، اگر نہیں ہونگے تو ان کی بہت بڑی ناکامی ہوگی۔
خبر کا کوڈ : 854235
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش