1
Tuesday 11 Aug 2020 22:50
امت مسلمہ کی بے حسی

غاصب صیہونیوں کے ہاتھوں گھر کی مسماری پر کمسن فلسطینی بچی کے بہتے آنسو!

غاصب صیہونیوں کے ہاتھوں گھر کی مسماری پر کمسن فلسطینی بچی کے بہتے آنسو!
اسلام ٹائمز۔ عرب ای مجلے عربی21 کے مطابق غاصب صیہونی فوجیوں نے فلسطینی دارالحکومت قدس شریف کے اندر ایک اور فلسطینی گھر کو مسمار کر دیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق غاصب صیہونی رژیم نے فلسطینی شہری ابراہیم صبیعہ کا گھر اس وجہ سے مسمار کر دیا کہ اس نے اسرائیلی حکومت سے اجازت نامہ نہیں لیا تھا۔ فلسطینی شہری کے گھر کی مسماری سے متعلق میڈیا میں نشر ہونے والی اس ویڈیو میں ابراہیم صبیعہ کی بیٹی کو اشک بہاتے دیکھا جا سکتا ہے جبکہ دوسری طرف گھر مسمار کرتی صیہونی مشینری کی آوازیں بھی سنائی دے رہی ہیں۔ کمسن فلسطینی بچی امت مسلمہ کی بے حسی کے سائے میں آنسو بہاتے ہوئے رو رو کر دہائیاں دے رہی ہے کہ بس کرو! بس کرو! اب ہم کہاں جائیں گے؟ وہ صیہونیوں کے ہاتھوں مسمار ہوتے اپنے گھر کو دیکھ کر اس قرآنی آیت "حسبی اللہ و نعم الوکیل" کی تلاوت کرتی ہے اور دعا مانگتے ہوئے کہتی ہے کہ ہمارا پروردگار ان ظالموں سے ضرور انتقام لے گا۔
 


واضح رہے کہ ابراہیم صبیعہ کا گھر جاری ہفتے کے دوران غاصب صیہونی رژیم کی جانب سے مسمار کیا جانے والا 7 واں فلسطینی گھر ہے جبکہ قبل ازیں غاصب صیہونی رژیم کے ہاتھوں مسمار یا ضبط کئے جانے والے فلسطینی گھروں سے متعلق اقوام متحدہ کے دفتر ہم آہنگی امور انسانی حقوق (United Nations Office for the Coordination of Humanitarian Affairs) کی ایک مکتوب رپورٹ میں بتایا گیا تھا کہ اسرائیلی حکومت اپنی طرف سے جاری کردہ اجازت نامہ نہ ہونے کے بہانے سے فلسطینی شہریوں کے گھر مسمار کر دیتی ہے۔ اقوام متحدہ کی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ غاصب صیہونیوں کی جانب سے جاری فلسطینی گھروں کی مسماری کے اس آپریشن میں نہ صرف 140 لوگوں کو نقصان پہنچایا گیا ہے بلکہ یہ صیہونی آپریشن، علاقے سے 25 دوسرے اشخاص کی جبری مہاجرت کا بھی باعث بنا ہے۔
خبر کا کوڈ : 879718
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
مربوطہ فائل
ہماری پیشکش