0
Monday 19 Oct 2020 00:32

ملک میں غدار بنانے کی فیکٹری بند کی جائے، مشتاق خان

ملک میں غدار بنانے کی فیکٹری بند کی جائے، مشتاق خان
اسلام ٹائمز۔ امیر جماعت اسلامی خیبر پختونخوا سینیٹر مشتاق احمد خان نے کہا ہے ملک میں غدار بنانے کی فیکٹری بند کی جائے، پاکستان میں کوئی غدار نہیں ہے، ہم سب پاکستانی اور محب وطن ہیں۔ حکومت اور راولپنڈی والے غداری کے سرٹیفیکیٹ دینا بند کر دیں۔ سابق وزیراعظم موجودہ جرنیلوں اور موجودہ وزیراعظم سابق جرنیلوں پر الزامات لگا رہے ہیں۔ چیف جسٹس سے مطالبہ کرتا ہوں کہ عمران خان اور نواز شریف اور دو موجودہ اور سابقہ جرنیلوں کو بلا کر ان سے پوچھ گچھ کی جائے اور الزامات کی تحقیقات کی جائے اور جو مجرم ہیں انہیں سزا دی جائے۔ انہوں نے اسے میوزیکل چیئر اور شیطانی چکر بنا دیا ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے تاجی کلی بازار بنوں میں شمولیتی جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ جلسہ عام سے جماعت اسلامی پاکستان کے نائب امیر پروفیسر محمد ابراہیم خان، امیر ضلع پروفیسر اجمل خان اور سابقہ امیدوار پی کے 88 اختر علی شاہ نے بھی خطاب کیا۔ اس موقع پر جماعت اسلامی ضلع لکی مروت کے امیر عزیز اللہ خان بھی موجود تھے۔

مشتاق خان کا کہنا تھا کہ اسٹیبلشمنٹ اور جرنیلوں کو سیاست میں دخل اندازی کا کوئی حق نہیں پہنچتا۔ پاکستان عوام کا ہے اور یہ دستور کے مطابق چلے گا سیاستدانوں کو سرے محل، لندن فلیٹس، اور پانامہ کے اکاؤنٹس کا حساب دینا ہوگا۔ سابق حکمرانوں کو چوری کے حساب سے بچنے کے لیے جمہوریت اور پارلیمنٹ کے پیچھے چھپنے نہیں دیں گے۔ پاک فوج کے شہداء ہمارے دل کے ٹکڑے ہیں لیکن جرنیلوں کو بھی شہداء کے پیچھے چھپنے نہیں دیں گے۔ پرویز مشرف اور عاصم سلیم باجوہ کو اپنی کرپشن کا حساب دینا ہوگا۔ پاکستان پاکستانیوں کا ہے۔ جماعت اسلامی سابقہ سیاستدانوں اور سابقہ جرنیلوں کا احتساب کرے گی۔ انہوں نے کہا کہ جنوبی اضلاع کی سڑکیں کھنڈرات کا منظر پیش کر رہی ہیں۔ حکومت جنوبی اضلاع میں سڑکوں اور انفراسٹرکچر کی تعمیر کے لئے اقدامات اٹھائے۔ سی پیک اور اکنامک زون جنوبی اضلاع کا حق ہے، انہیں اس حق سے محروم نہ کیا جائے۔ جنوبی اضلاع کو ہر قسم کے حقوق صرف جماعت اسلامی دلا سکتی ہے۔ 
خبر کا کوڈ : 892773
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

ہماری پیشکش