0
Wednesday 21 Oct 2020 00:24

مشرقی پاکستان بھی ذاتی مفادات کیوجہ سے ٹوٹا تھا، خواجہ آصف

مشرقی پاکستان بھی ذاتی مفادات کیوجہ سے ٹوٹا تھا، خواجہ آصف
اسلام ٹائمز۔ پاکستان مسلم لیگ (ن) کے مرکزی رہنماء خواجہ آصف نے کہا ہے کہ اس وقت بہت سے ادارے ٹکرا رہے ہیں۔ انہوں نے خبردار کیا کہ اداروں کے ٹکراؤ سے نقصان ریاست کا ہوگا۔ نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے سابق وزیر خارجہ خواجہ آصف نے کہا کہ اداروں کو بیٹھ کر آپس میں معاملات ٹھیک کرنے چاہیئں۔ ایک سوال کے جواب میں خواجہ آصف نے کہا کہ اس وقت معاملہ مفاہمت کی جانب جاتا نظر نہیں آرہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ مشرقی پاکستان بھی ذاتی مفادات کی وجہ سے ٹوٹا تھا۔ انہوں ںے الزام عائد کیا کہ عمران خان نے میرے مخالفین کے ذریعے مجھے نقصان پہنچانے سے متعلق بات کی۔

خواجہ آصف نے الزام لگایا کہ میرے گھر کے باہر مظاہرہ کرنے، ایکسیڈنٹ کروانے اور میری اہلیہ کو گاڑی سے نکالنے کی باتیں کی گئیں۔ سابق وزیر دفاع خواجہ آصف کا کہنا تھا کہ آرمی چیف نے میرے حلقے میں یقین دہانی کروائی تھی کہ وہاں دھاندلی نہیں ہوگی۔ خواجہ آصف نے پروگرام کے میزبان عادل شاہ زیب کی جانب سے پوچھے گئے ایک اور سوال کے جواب میں کہا کہ آرمی چیف کی ایکسٹینشن کا فیصلہ اس وقت کے حالات کے مطابق درست تھا۔ خواجہ آصف نے واضح طور پر کہا کہ ملک کو آئین اور قانون کے مطابق چلانے کے علاوہ کوئی دوسرا راستہ نہیں ہے۔
خبر کا کوڈ : 893180
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش