?>?> کیپیٹل ہل ہنگامے پر ٹرمپ کو ملزم بھی ٹھہرایا جا سکتا ہے - اسلام ٹائمز
0
Friday 8 Jan 2021 10:48

کیپیٹل ہل ہنگامے پر ٹرمپ کو ملزم بھی ٹھہرایا جا سکتا ہے

کیپیٹل ہل ہنگامے پر ٹرمپ کو ملزم بھی ٹھہرایا جا سکتا ہے
اسلام ٹائمز۔ واشنگٹن ڈی سی کے فیڈرل پراسیکیوٹر کا کہنا ہےکہ کیپیٹل ہل ہنگامے پر ٹرمپ کو ملزم بھی ٹھہرایا جاسکتا ہے۔ واشنگٹن ڈی سی کے فیڈرل پراسیکیوٹر MICHAEL SHERWIN کا کہنا ہے کہ کیپیٹل ہل ہنگامے سے پہلے ٹرمپ کی تقریر کی تحقیقات بھی کی جا سکتی ہے اور اگر اشتعال انگیزی کے ثبوت ملے تو صدر کو ملزم ٹھہرایا جا سکتا ہے۔ دوسری جانب کیپیٹل ہل حملے کے بعد امریکی صدر کی مدت صدارت خطرے میں پڑ گئی اور ٹرمپ کی برطرفی کا مطالبہ زور پکڑنے لگا۔ ٹرمپ کی مدت صدارت ختم ہونے میں اب بھی 17 روز باقی ہیں لیکن ہاؤس اسپیکر نینسی پلوسی سمیت 100 سے زائد ارکان کانگریس نے ٹرمپ کو فوری ہٹانے کا مطالبہ کیا ہے۔ اسپیکر نینسی پلوسی نے 25 ویں آئینی ترمیم یا مواخذے کے ذریعے ٹرمپ کو ہٹانے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا اگر ٹرمپ کابینہ اور نائب صدر نہ مانے تو کانگریس ٹرمپ کے مواخذے کے لیے تیار رہے۔ قانونی ماہرین کے مطابق 25 ویں آئینی ترمیم کسی بھی امریکی صدر کو زبردستی عہدے سے برطرف کرنے کی طاقت رکھتی ہے، ترمیم اس وقت استعمال کی جا سکتی ہے جب صدر بیماری یا ذہنی خلل کی وجہ سے اپنے فرائض انجام نہ دے سکتا ہو یا خطرناک طرزِ عمل کا مرتکب ہو۔
خبر کا کوڈ : 908811
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

ہماری پیشکش