0
Wednesday 27 Jan 2021 18:12

جی بی میں زرعی یونیورسٹی فیصل آباد کے سب کیمپس کے قیام کیلئے اقدامات اٹھائیں گے، کاظم میثم

جی بی میں زرعی یونیورسٹی فیصل آباد کے سب کیمپس کے قیام کیلئے اقدامات اٹھائیں گے، کاظم میثم
اسلام ٹائمز۔ وزیر زراعت گلگت بلتستان محمد کاظم میثم نے کہا ہے کہ زرعی یونیورسٹی فیصل آباد کے سب کیمپس گلگت بلتستان کے قیام کے لئے جلد عملی کاوشیں بروئے کار لائی جائیں گی تاکہ پاکستان کے داخلی دروازے پر زرعی خوشحالی اور خود کفالت کے لئے مقامی آبادی کو نئی جدتوں سے آراستہ کیا جا سکے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنے وفد کے ہمراہ زرعی یونیورسٹی فیصل آباد کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر آصف تنویر، زرعی ماہرین اور سائنسدانوں کے علاوہ جی بی کے طلباء کے وفود سے ملاقات کے دوران کیا۔ انہوں نے کہا کہ گلگت بلتستان چاروں موسموں کا حامل ایک ایسا خطہ ارضی ہے جہاں سے میٹھے پانیوں کے گلیشیئرز سے ٹپکتے ہوئے زرخیزیوں کے حامل آب حیات سے دریائے سندھ کی صورت میں نصف سے زائد پاکستان سیراب ہوتا ہے۔ یہاں دنیا کے لذیز ترین پھل اور ادویاتی نباتات وافر مقدار میں دستیاب ہیں جنہیں ویلیو ایڈیشن کے ذریعے ملک بھر میں بھجوایا جائے تو کوئی وجہ نہیں کہ نچلی سطح پر غربت کا خاتمہ نہ ہو سکے۔

محمد کاظم میثم نے کہا کہ زرعی یونیورسٹی فیصل آباد نہ صرف برصغیر بلکہ براعظم ایشیاء میں زرعی تعلیم و تحقیق میں صف اول کی جامعہ ہے لہٰذا یہاں گلگت بلتستان کے طلباء و طالبات کے لئے مختص کوٹہ بڑھایا جانا چاہیے۔ اس مقصد کے لئے وہ فوری طور پر اپنی وزارت کی جانب سے خط لکھیں گے تاکہ آئندہ تعلیمی سال سے وہاں کے طلباء کو زیادہ تعداد میں داخلہ میسر آ سکے۔ انہوں نے کہا کہ وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر آصف تنویر کی سربراہی میں بہت جلد یونیورسٹی کے سائنسدانوں کا ایک وفد ان کی خصوصی دعوت پر گلگت  بلتستان کا دورہ کرے گا تاکہ وہاں پر سب کیمپس کے قیام کے لئے جائزہ لیا جا سکے۔ اس موقع پر وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر آصف تنویر نے کہا کہ وزیر زراعت گلگت بلتستان کی جانب سے خط موصول ہوتے ہی یونیورسٹی طلباء کا کوٹہ بڑھانے کے لئے اکیڈیمک کونسل اور سنڈیکیٹ سے منظوری حاصل کرتے ہوئے اس امر کو یقینی بنایا جائے گا تاکہ زیادہ سے زیادہ طلبا و طالبات یہاں سے اعلیٰ تعلیم حاصل کر سکیں۔ انہوں نے کہا کہ اس مقصد کے لئے یونیورسٹی اور گلگت بلتستان حکومت اپنے اپنے کوآرڈینیٹر مقرر کرے گی تاکہ اس مرحلے کی تیزی کے ساتھ تکمیل یقینی بنائی جا سکے۔

وائس چانسلر کا کہنا تھا کہ وفاقی حکومت کی منظوری اور گلگت بلتستان میں انفراسٹرکچر کی فراہمی کی صورت میں یونیورسٹی جی بی میں اپنا سب کیمپس قائم کر سکے گی جہاں زرعی تعلیم و تحقیق کے ساتھ ساتھ لائیوسٹاک، جنگلات اور دیگر شعبوں میں جدید خطوط پر پیش رفت یقینی بنائی جائے گی۔ رجسٹرار عمر سعید قادری نے کہا کہ یونیورسٹی گلگت بلتستان کے طلباء و طالبات کو کرونا کے دنوں میں بھی ہاسٹلز میں پوری سہولیات دے رہی ہے تاکہ وہ اپنی آن لائن تعلیم کے ساتھ ساتھ عملی تربیت احسن طریقے سے حاصل کر سکیں۔ انہوں نے کہا کہ گلگت بلتستان کی حکومت کی جانب سے موصول ہونے والی سفارشات کی روشنی میں داخلے خالص میرٹ کی بنیاد پر دیئے جا رہے ہیں۔ اس دورہ کے فوکل پرسن پروفیسر ڈاکٹر محمد جلال عارف نے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ زرعی سائنسدانوں کے متوقع دورہ جی بی کے دوران پھلوں، سبزیوں، لائیوسٹاک اور حشریات کے ماہرین شامل کئے جائیں گے تاکہ وہاں کے کسانوں کو مفید مشورے دیئے جا سکیں۔

صوبائی وزیر زراعت کے ہمراہ گلگت بلتستان کے وفد میں ڈاکٹر ذاکر حسین ڈپٹی ڈائریکٹر محکمہ زراعت سکردو، زاہد علی خان ڈپٹی ڈائریکٹر (ر) محکمہ زراعت بلتستان اور محمد سلیم پی آر او ٹو وزیر زراعت شامل تھے۔ یونیورسٹی کی جانب سے ڈین کلیہ امور حیوانات پروفیسر ڈاکٹر محمد اسلم مرزا، ڈائریکٹر سٹوڈنٹ افیئرز پروفیسر ڈاکٹر شہباز طالب ساہی، ہال وارڈن پروفیسر ڈاکٹر محمد یٰسین، پروفیسر ڈاکٹر سعید احمد، پروفیسر ڈاکٹر ظہیر احمد ظہیر، پرنسپل آفیسر اسٹیٹ پروفیسر ڈاکٹر قمربلال، ڈاکٹر وسیم امجد و دیگر نے شرکت کی۔
خبر کا کوڈ : 912727
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش