0
Saturday 1 May 2021 12:12

پاکستان آنیوالے مسافروں کیلئے 72 گھنٹے قبل کورونا کی منفی رپورٹ دکھانا لازمی قرار

پاکستان آنیوالے مسافروں کیلئے 72 گھنٹے قبل کورونا کی منفی رپورٹ دکھانا لازمی قرار
اسلام ٹائمز۔ کورونا وائرس کی بگڑتی صورتحال کے پیش نظر نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر نے بیرون ممالک سے پاکستان آنے والے مسافروں کے لیے نئی ایڈوائزری جاری کی ہے۔ این سی او سی کی جانب سے وزارت خارجہ، وزارت داخلہ اور سول ایوی ایشن سمیت تمام صوبائی چیف سیکرٹریز کو نئی ایڈوائزی کے حوالے سے مراسلہ بھی ارسال کر دیا گیا ہے۔ ایڈوائزری میں پاکستان آنے والی ائیر ٹریفک کو 80 فیصد تک کم کرنے کی ہدایت کی گئی ہے اور کہا گیا ہے کہ فضائی سفر محدود رکھنے کی پابندیاں 4 سے 20 مئی تک نافذ رہیں گی، 18 مئی کو موجودہ پابندیوں کے پلان کا از سر نو جائزہ لیا جائے گا۔ ایڈوائزری کے مطابق پاکستان آنے والے مسافروں کو 72 گھنٹے قبل پی سی آر منفی ٹیسٹ رپورٹ دکھانا لازم ہو گا، مسافروں کی پاکستان آمد پر ائیرپورٹ پر دوبارہ پی سی آر ٹیسٹ کیا جائے گا۔ اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ این ڈی ایم اے تمام انٹرنیشنل ائیرپورٹس پر پی سی آر ٹیسٹ کٹس کی فراہمی یقینی بنانے کی پابند ہو گی، مسافر ٹیسٹ پازیٹو ہونے پر 10 دن قرنطینہ کرنے کے پابند ہوں گے۔ این سی او سی کی ایڈوائزری میں کہا گیا ہے کہ مثبت رپورٹ پر مسافر کو ضلعی انتظامیہ کے زیر انتظام قرنطینہ میں بھیجا جائے گا۔ اعلامیے میں بیرون ملک سے آنے والے تمام مسافروں کی فاسٹ ٹریک ایپ میں رجسٹریشن لازمی قرار دی گئی ہے تاہم دیگر ممالک سے ملک بدر کیے گئے پاکستانی فاسٹ ٹریک ایپ کی رجسٹریشن سے مستثنیٰ ہوں گے۔ناین سی او سی نے سول ایوی ایشن، پی آئی اےکو ریوائزڈ ائیر ٹریفک پلان بنانے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا ہے کہ تمام انٹرنیشنل ائیرپورٹس پر محکمہ صحت کے عملے کی 24 گھنٹے موجودگی یقینی بنائی جائے گی، ایوی ایشن ڈویژن اور ائیرپورٹ مینجمنٹ مسافروں کی ٹیسٹنگ کے لیے محکمہ صحت کو سہولتیں فراہم کریں گے۔
خبر کا کوڈ : 930134
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش