0
Thursday 24 Jun 2021 00:05

ہمارے خدشات دور نہ ہوئے تو یکم جولائی سے پنجاب بھر میں علماء کرام سڑکوں پہ ہونگے، علامہ اقتدار نقوی

ہمارے خدشات دور نہ ہوئے تو یکم جولائی سے پنجاب بھر میں علماء کرام سڑکوں پہ ہونگے، علامہ اقتدار نقوی
اسلام ٹائمز۔ مجلس وحدت مسلمین جنوبی پنجاب کے صوبائی سیکرٹری جنرل علامہ اقتدار حسین نقوی نے کہا ہے کہ پنجاب میں متحدہ علماء بورڈ سمیت دیگر اداروں میں اہل تشیع علماء اور اکابرین کی غیر مساوی موجودگی سوالیہ نشان ہے، حکومتی اداروں میں مسلکی بنیاد پر برابری کی سطح پر نمائندگی ہونی چاہیئے، حکومتی اداروں میں مناسب نمائندگی نہ ہونے پر اہل تشیع علماء میں شدید تشویش پائی جاتی ہے، علامہ اقتدار نقوی نے مزید کہا کہ اگر ہمارے خدشات دور نہ ہوئے تو یکم جولائی سے پنجاب بھر میں علماء کرام سڑکوں پہ ہونگے۔

ہم پاکستان کو ایک پرامن اور معتدل ریاست بنانا چاہتے ہیں، مذہبی رواداری اور اتحاد امت ہماری اولین ترجیح ہے، لیکن اپنے عقائد پر کسی صورت سمجھوتہ نہیں کرسکتے۔ متحدہ علماء بورڈ میں شیعہ مکتب فکر کی نمائندگی برابری کی سطح پر دیکھنا چاہتے ہیں، اب گیند حکومت کی کورٹ میں ہے کہ وہ اس حساس مسئلے پہ کیا لائحہ عمل اختیار کرتے ہیں۔ ہم اپنے آئینی، قانونی و جمہوری حقوق کے لئے ہر قسم کی آئینی و قانونی پرامن جدوجہد کے لئے آمادہ ہیں۔
خبر کا کوڈ : 939729
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش