0
Tuesday 23 Nov 2021 21:26

محبوبہ مفتی کو حیدرپورہ جانے سے روکا گیا، گھر میں نظربند

محبوبہ مفتی کو حیدرپورہ جانے سے روکا گیا، گھر میں نظربند
اسلام ٹائمز۔ جموں و کشمیر پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی کی صدر اور سابق وزیراعلٰی محبوبہ مفتی کو منگل کے روز ایک بار پھر خانہ نظربند رکھا گیا۔ پارٹی کے ایک لیڈر نے بتایا کہ محبوبہ مفتی کو منگل کے روز حیدرپور فرضی انکاؤنٹر میں شہید ہونے والے الطاف احمد اور ڈاکٹر مدثر گل کے گھر تعزیت کے لئے جانا تھا لیکن انہیں گھر سے باہر نکلنے کی اجازت نہیں دی گئی تاہم سرکاری طور پر محبوبہ مفتی کی خانہ نظربندی کی کوئی تصدیق نہیں ہوئی ہے۔ پی ڈی پی کے ترجمان سید سہیل بخاری نے محبوبہ مفتی کی خانہ نظربندی پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے اپنے ایک ٹویٹ میں کہا کہ انہیں (محبوبہ مفتی) کو جائے تصادم آرائی کی طرف مارچ نہیں کرنا تھا بلکہ مہلوک دو شہریوں کے سوگوار خاندانوں کو ملنے جانا تھا۔

قابل ذکر ہے کہ محبوبہ مفتی نے اپنے پارٹی لیڈروں کے ساتھ اتوار کے روز یہاں راج بھون کے باہر حیدرپورہ انکاؤنٹر میں شہریوں کی ہلاکت کے خلاف احتجاج درج کرتے ہوئے لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا سے معافی طلب کرنے کا مطالبہ کیا۔ جموں و کشمیر انتظامیہ نے اس واقعے میں مجسٹریل انکوائری کرانے کے احکامات صادر کئے ہیں تاہم یہاں کی سیاسی جماعتیں مجسٹریل کے بجائے جوڈیشل انکوائری کرانے کا مطالبہ کر رہی ہیں۔ نینشل کانفرنس کے سرپرست اعلٰی اور رکن پارلیمان ڈاکٹر فاروق عبداللہ نے گذشتہ روز نامہ نگاروں سے کہا کہ حیدرپورہ انکاؤنٹر کے متعلق اصل حقائق جوڈیشل انکوائری سے ہی سامنے آسکتے ہیں۔
خبر کا کوڈ : 965062
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش