0
Wednesday 1 Dec 2021 22:02

عدالت ایف سی کی غیر قانونی تجاوزات کا نوٹس لے، عبدالحق ہاشمی

عدالت ایف سی کی غیر قانونی تجاوزات کا نوٹس لے، عبدالحق ہاشمی
اسلام ٹائمز۔ امیر جماعت اسلامی بلوچستان مولانا عبدالحق ہاشمی نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ چیف جسٹس کوئٹہ میں بھی ایف سی کے عام سڑکوں پر تجاوزات اور غیر قانونی بندشوں پر نوٹس لیں۔ ٹریفک میں تنگی اور راہ گیروں کی پریشانی میں ان تجاوزات کا بہت بڑا دخل ہے۔ جگہ جگہ تلاشی، ٹریفک مسائل، تجاوزات کی وجہ سے عام شہری پریشان ہیں۔ سپریم کورٹ ایف سی چیک پوسٹوں کی وجہ سے بننے والے تجاوزات کا نوٹس لیتے ہوئے شہریوں کو ان مسائل سے نجات دلائے۔ انہوں نے مزید کہا کہ سی پیک کا فائدہ بلوچستان کو نہ دینے کی وجہ سے اہل بلوچستان میں تشویش پائی جاتی ہے اور نوجوان احساس محرومی کا شکار ہیں۔ بلوچستان کے عوام کو آئینی اور قانونی حق نہ دینے کی وجہ سے ہر طرف سے حق دو تحریکیں اُٹھیں گی۔ سی پیک منصوبے کے ثمرات بلوچستان کو ملنا وقت کی اہم ضرورت ہے۔ کوئٹہ کراچی روڈ ڈبل کرنے کے بجائے موٹر وے طرز پر جدید شاہراہ بنائی جائے۔
 
انہوں نے کہا کہ بلوچستان کے عوام کو کب تک لولی پاپ سے ٹرخایا جائیگا۔ وفاق نے بلوچستان کو ہر میگا پراجیکٹس و ترقیاتی کاموں سے محروم کر دیا ہے۔ حکومتی ٹھیکیداری سسٹم، وزراء کی غفلت کی وجہ سے بدعنوانی میں اضافہ ہو رہا ہے، جو لمحہ فکریہ ہے۔ ساحل و بارڈر ٹریڈ کے حوالے سے اہل بلوچستان پر بلاوجہ کی سختی ٹھیک نہیں۔ حکومتی سطح پر روزگار نہیں، بے رورزگاری عام ہیں۔ ان حالات میں ضرورت اس بات کی ہے کہ اہل بلوچستان کو بھی ہمسایہ ممالک سے آسانی و سہولت کیساتھ قانونی کاروبار کرنے دیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت لاپتہ افراد کو منظر عام پر لائے۔ جماعت اسلامی نے لاپتہ افراد کی بازیابی کے حوالے سے اپنی بھرپور کوششیں کی ہیں، گذشتہ 50 سالوں سے بلوچستان میں قوم پرستوں کی حکومت رہی ہے۔ صوبے میں کرپشن کی شرح 65 فیصد تھی۔ 2019ء کے بجٹ سے 17 ارب روپے ضائع ہوگئے۔ ان حکومتوں کی نااہلی کی وجہ سے ترقیاتی منصوبے بھی مکمل نہ ہوسکے۔ اس سال بھی 40 ارب استعمال نہیں ہوئے اور یہ قومی خزانے میں واپس چلے گئے۔
خبر کا کوڈ : 966461
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش