0
Wednesday 19 Jan 2022 23:15

کراچی کو پرویز مشرف والا نہ سہی ذوالفقار علی بھٹو والا بلدیاتی اختیارات دیدو، حافظ نعیم الرحمن

کراچی کو پرویز مشرف والا نہ سہی ذوالفقار علی بھٹو والا بلدیاتی اختیارات دیدو، حافظ نعیم الرحمن
اسلام ٹائمز۔ کالے بلدیاتی قانون کے خلاف جماعت اسلامی کے تحت سندھ اسمبلی کے باہر دھرنے کے بیس دن مکمل ہوگئے، آج جمعرات 20 جنوری کو حسن اسکوائر پر خواتین کا عظیم الشان مارچ و دھرنا ہوگا، اگلے مرحلے میں کراچی کے اہم اور اسٹریٹجکٹ پوائنٹ پر دھرنے دیئے جائیں گے، ایک ہفتے میں پورے شہر میں دو ہزار کارنر میٹنگز ہوں گی۔ امیر جماعت اسلامی کراچی حافظ نعیم الرحمن نے سندھ اسمبلی کے باہر دھرنے کے بیسویں روز شرکاء، میڈیا، وفود اور بیرون ملک مقیم آن لائن دھرنے میں شرکت کرنے والے پاکستانیوں سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہم سندھ حکومت اور پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری سے کہتے ہیں کہ کراچی کو پرویز مشرف دور کے اختیارات نہیں دیتے نہ سہی ذوالفقار علی بھٹو دور کے بلدیاتی اختیارات دے دو، ہم کراچی کے تین کروڑ سے زائد عوام کے جائز اور قانونی حقوق اور شہر کے گھمبیر مسائل کے حل کے لئے، بااختیار شہری حکومت کے قیام اور میئر اور بلدیاتی اداروں کے اختیارات اور وسائل کا مطالبہ کررہے ہیں، ہمارے تمام مطالبات آئینی اور قانونی ہیں، ان مطالبات کو کسی آمر کے نظام کا نام دے کر رد نہیں کیا جاسکتا۔

انہوں نے کہا کہ وزیراعلیٰ، صوبائی ترجمان اور وزیر اطلاعات عوام کو دھوکہ دینے کے بجائے شہری ادارے بلدیہ کے حوالے کریں، ان کے اختیارات اور وسائل واپس کریں، اپنی پارٹی کے بانی چیئرمین ذوالفقار علی بھٹو کے دور کے سندھ پیپلز لوکل گورنمنٹ آرڈیننس 1972ء کا ہی مطالعہ کرلیں، 1972ء کے اس بلدیاتی نظام میں کراچی میٹروپولیٹن کارپوریشن کو جو اختیارات اور محکمے اس کے پاس تھے وہی دے دیں۔ حافظ نعیم الرحمن نے کہا کہ پی ٹی آئی اور ایم کیو ایم نے جعلی مردم شماری جس میں کراچی کی آدھی آبادی کو غائب کردیا گیا کی حتمی منظوری دے کر اور کوٹہ سسٹم میں غیر معینہ مدت تک اضافہ کرکے نہ صرف اہل کراچی کے مستقبل پر شب خون مارا بلکہ سندھ میں پیپلز پارٹی کی من مانی اور بد عنوانیوں کے لیے راہ ہموار کردی، پیپلز پارٹی خوش ہے کہ جو کام وہ نہ کرسکی وہ پی ٹی آئی اور ایم کیو ایم نے کردیا اور حقیقت یہ ہے کہ کراچی کے ساتھ ظلم و زیادتی اور حق تلفی میں پیپلز پارٹی اور ایم کیو ایم برابر کی شریک ہیں۔
خبر کا کوڈ : 974544
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش