0
Tuesday 14 May 2013 19:01

پاکستانی عوام فلسطینیوں کے حقوق کی جنگ لڑتے رہیں گے، فلسطین فاؤنڈیشن

پاکستانی عوام فلسطینیوں کے حقوق کی جنگ لڑتے رہیں گے، فلسطین فاؤنڈیشن
اسلام ٹائمز۔ پاکستانی عوام فلسطینیوں کے حقوق کی جنگ لڑتی رہے گی، فلسطینیوں کے حقوق کے لئے ہر سطح پر آواز بلند کرتے رہیں گے، اسرائیل ایک غاصب صیہونی ریاست ہے جس کا وجود پوری انسانیت کے لئے خطرہ ہے، فلسطین پر غاصب اسرائیل کے پینسٹھ سالہ ناجائز تسلط پر عالمی برادری اور انسانی حقوق کمیشن کی خاموشی سوالیہ نشان اور شرمناک ہے۔ ان خیالات کا اظہار عوامی مسلم لیگ پاکستان کے مرکزی رہنما محفوظ یار خان ایڈووکیٹ، فلسطین فاؤنڈیشن پاکستان کے مرکزی ترجمان صابر کربلائی اور وکلاء برادری کے محبوب آفتاب خان، ایس ایم بخاری، عابدہ خان، رعنا پروین، کنور عامر اور اسد اللہ خان ایڈووکیٹ سمیت دیگر نے کراچی پریس کلب کے باہر یوم نکبہ کی مناسبت سے منعقدہ احتجاجی مظاہرے سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ شرکائے احتجاجی مظاہرہ سے خطاب کرتے ہوئے رہنماؤں نے زور دیا کہ فلسطین، فلسطینیوں کا وطن ہے اور فلسطینیوں کو حق حاصل ہے کہ وہ اپنے وطن واپس آئیں۔

ان کا کہنا تھا کہ سنہ 1948ء میں برطانوی اور مغربی سامراجی سازشوں کی نتیجے میں غاصب اسرائیل کی بنیاد رکھی گئی جو آج پینسٹھ برس گذر جانے کے بعد نہ صرف مشرق وسطیٰ بلکہ پوری انسانیت اور پوری دنیا کے لئے خطرہ بن چکا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ دنیا کے باشعور اور باضمیر انسانوں کو چاہئیے کہ دہشت گردی اور ظلم و ستم کے اس فتنے اسرائیل کو جڑ سے اکھاڑ پھینکیں۔ رہنماؤں نے عالمی برادری کی فلسطین پر غاصب اسرائیلی قبضے اور مظالم پر خاموشی کی شدید مذمت کرتے ہوئے اسے سوالیہ نشان قرار دیا اور کہا کہ عالمی برادری اور انسانی حقوق کے علمبرداروں کو چاہئیے کہ وہ دہرا معیار ترک کر دیں اور فلسطین میں بسنے والے مظلوم اور نہتے فلسطینیوں کی مدد کریں۔ انہوں نے اقوام متحدہ پر سخت تنقید کرتے ہوئے کہا کہ اقوام متحدہ امریکی کٹھ پتلی بن چکی ہے جسے دنیا بھر میں اور بالخصوص فلسطین میں ہونے والے دہشت گردانہ مظالم نظر نہیں آتے۔ رہنماؤں کا کہنا تھا کہ فلسطینیوں کے حق واپسی کے لئے جس حد تک ممکن ہوگا پاکستانی عوام جدوجہد کریں گے اور عالمی عدالت انصاف میں پٹیشن بھی درج کروائی جائے گی تاکہ پینسٹھ سالوں سے در بدر کئے گئے، مظلوم فلسطینیوں کو ان کی سرزمینوں پر لوٹایا جائے۔
خبر کا کوڈ : 263835
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب