0
Tuesday 28 Oct 2014 20:02

جب تک سمندر کنارے عبداللہ شاہ غازی کا مزار ہے کراچی کو کچھ نہیں ہوسکتا، آغا سراج درانی

جب تک سمندر کنارے عبداللہ شاہ غازی کا مزار ہے کراچی کو کچھ نہیں ہوسکتا، آغا سراج درانی
اسلام ٹائمز۔ سندھ اسمبلی کے کچھ اراکین سمندری طوفان ’نیلوفر‘ سے ملک کے ساحلی علاقوں میں آنے والے تباہی کے حوالے سے خاصے پریشان ہیں لیکن اسپیکر سندھ اسمبلی آغا سراج درانی اسے سنجیدگی سے لینے پر تیار نہیں۔ منگل کو سندھ اسمبلی کے اجلاس کے دوران ایک رکن اسمبلی نے کہا کہ طوفان کی آمد کے پیش نظر حکومت کو احتیاطی اقدامات اٹھانے کی ضرورت ہے تاہم اسپیکر سراج درانی ان کی بات مذاق میں اڑا گئے۔ اس موقع پر سراج درانی نے ازراہ مذاق کہا کہ یہ تو کسی لیڈی کا نام ہو سکتا ہے۔ اس موقع پر جب اراکین نے زور دیا کہ حکومت کو احتیاطی تدابیر اختیار کرنے کی ضرورت ہے تو اسپکر سندھ اسمبلی نے یقین دہانی کرائی جب تک سمندر کنارے حضرت عبداللہ شاہ غازی کا مزار ہے کراچی کو کچھ نہیں ہوسکتا، حضرت عبداللہ شاہ غازی کے مزار کی وجہ سے آج تک بچتے آئے ہیں اور انشاءاللہ اس مرتبہ بھی بچیں گے۔ آغا سراج درانی نے کہا کہ جن لوگوں کو طوفان کا خوف ہے وہ اندرون سندھ چلے جائیں۔ محکمہ موسمیات کے مطابق سنگین نوعیت کا طوفان کراچی آنے والے دنوں میں پاکستان اور ہندوستان کے ساحلی علاقوں سے ٹکرائے گا اور اس میں دن بدن شدت آتی جا رہی ہے۔ طوفان کے نتیجے میں زیریں سندھ خصوصاً کراچی اور بدین میں شدید بارشوں کی بھی توقع ہے۔
خبر کا کوڈ : 416963
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے