0
Sunday 22 Nov 2020 12:29

اگر مکمل لاک ڈاؤن پر مجبور ہوئے تو ذمہ دار پی ڈی ایم ہو گی، عمران خان

اگر مکمل لاک ڈاؤن پر مجبور ہوئے تو ذمہ دار پی ڈی ایم ہو گی، عمران خان
اسلام ٹائمز۔ وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ اگر کورونا وائرس کے کیسز موجودہ شرح سے بڑھتے رہے تو ہم مکمل لاک ڈاؤن پر مجبور ہو جائیں گے اور اس کے نتائج کی ذمہ داری اپوزیشن کی پاکستان ڈیمو کریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) پر عائد ہو گی۔ سماجی روابط کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے پیغامات میں وزیراعظم نے کہا کہ اپوزیشن این آر او حاصل کرنے کی تڑپ میں عوام کی زندگیاں اور معاش تباہ کر رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہاں میں واضح کر دوں کہ وہ 10 لاکھ جلسے بھی کر لیں لیکن انہیں این آر او نہیں ملے گا۔ وزیراعظم نے کہا کہ میں لاک ڈاؤن جیسا اقدام نہیں کرنا چاہتا کہ جس کے نتیجے میں ہماری معیشت کو نقصان پہنچنا شروع ہو جائے کہ جو اس وقت تیزی سے ریکوری ظاہر کر رہی ہے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ بدقسمتی سے اپوزیشن کا واحد مقصد این آر او ہے چاہے اس سے لوگوں کی زندگیوں اور ملک کی معیشت کا جو بھی نقصان ہو۔ ایک پیغام میں وزیراعظم نے کہا کہ پاکستان میں کووِڈ 19 کی دوسری لہر کے اعدادوشمار تشویشناک ہیں اور ساتھ ہی انہوں نے پاکستان میں گزشتہ 15 روز کے دوران وینٹیلیٹرز کے استعمال میں اضافے کے اعدادوشمار بھی بتائے۔ ان اعدادوشمار کے مطابق پشاور میں کووِڈ 19 مریضوں کے زیر استعمال وینٹیلیٹرز کی تعداد میں 200 فیصد، ملتان میں 200 فیصد، کراچی میں 148 فیصد، لاہور میں 114 فیصد، اسلام آباد میں 65 فیصد اضافہ ہوا ہے۔
خبر کا کوڈ : 899293
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش