1
0
Sunday 9 Jul 2017 18:24

کراچی ضمنی الیکشن، پی ایس 114 میں پولنگ کا وقت ختم، ووٹوں کی گنتی جاری

کراچی ضمنی الیکشن، پی ایس 114 میں پولنگ کا وقت ختم، ووٹوں کی گنتی جاری
اسلام ٹائمز۔ شہر قائد میں صوبائی حلقہ پی ایس 114 میں ضمنی الیکشن کیلئے پولنگ کا وقت ختم ہوگیا، جس کے بعد ووٹوں کی گنتی کا عمل جاری ہے۔ تفصیلات کے مطابق صوبائی اسمبلی کے حلقہ پی ایس 114 میں ضمنی الیکشن کیلئے پولنگ کا وقت ختم ہوگیا ہے، جس بعد ووٹوں کی گنتی کا عمل جاری ہے، ضمنی انتخاب کے دوران کچھ مقامات پر گرما گرمی اور بدنظمی بھی دیکھنے میں آئی، چنیسر گوٹھ میں پیپلز پارٹی اور آزاد امیدوار کے حامیوں کے درمیان تلخ کلامی اور کھینچا تانی ہوئی، آزاد امیدوار اور پی ٹی آئی کی جانب سے پیپلز پارٹی پر دھاندلی کے الزامات بھی لگائے گئے۔ دوسری جانب محمود آباد میں پی پی اور (ن) لیگ کے حامی ایک دوسرے کے سامنے آگئے، جبکہ کچھ پولنگ اسٹیشنز پر میڈیا نمائندوں کے داخلے پر بھی پابندی لگائی گئی، جس کا الیکشن کمیشن نے نوٹس لے لیا ہے۔ چینسر گوٹھ اور محمودآباد میں کشیدہ صورتحال اور سیاسی جماعتوں کے کارکنوں میں تصادم کے باعث ریٹرننگ آفیسر نے رینجرز کی مزید نفری طلب کرلی ہے۔

چنیسر گوٹھ میں کشیدہ صورتحال کے بعد ڈی جی رینجرز نے سیکٹر کمانڈر سے ٹیلی فونک رابطہ کیا اور چنیسر گوٹھ کے متاثرہ پولنگ اسٹیشن کی صورتِ حال معلوم کی۔ دوسری جانب رینجرز اور پولیس نے محمود آباد میں مختلف پولیس اسٹیشنوں کے باہر سے 8 مشتبہ افراد کو حراست میں لے لیا۔ پی ایس 114 کے ضمنی انتخاب میں مدمقابل 27 امیدوار میں سے پیپلز پارٹی کے سعید غنی، جماعت اسلامی کے ظہور احمد جدون، پی ٹی آئی کے محمد نجیب ہارون، ایم کیو ایم کے کامران ٹیسوری اور ن لیگ کے علی اکبر گجر نمایاں ہیں۔ حلقے میں ایک لاکھ 93 ہزار 892 ووٹرز ہیں، جن میں مرد ووٹرز کی تعداد 1 لاکھ 12 ہزار 203 ہے اورخواتین رائے دہندگان کی تعداد 81 ہزار 689 ہے۔ پولنگ کیلئے 92 پولنگ اسٹیشنز قائم کئے گئے تھے اور تمام اسٹیشنز کو حساس قرار دیا گیا تھا۔

الیکشن کے سلسلے میں سخت سیکیورٹی انتظامات کئے گئے، امن و امان کو یقینی بنانے کیلئے 2 ہزار رینجرز اہلکار اور 1500 پولیس کے جوان تعینات کئے گئے، جبکہ کسی بھی ہنگامی صورت حال سے نمٹنے کیلئے فوج کو بھی اسٹینڈ بائی رکھا گیا۔ حلقے میں دفعہ 144 نافذ کی گئی تھی اور شناختی کارڈ کے بغیر پولنگ اسٹیشن میں داخل کی اجازت نہیں تھی۔ پولنگ اسٹیشن کے 100 فٹ کے قریب امیدوار یا پارٹی کیمپ لگانے پر بھی پابندی عائد تھی، جبکہ کسی بھی شکایت کیلئے صوبائی الیکشن کمشنر آفس میں کمپلین سیل بھی قائم کیا گیا ہے۔ واضح رہے کہ سپریم کورٹ نے الیکشن میں دھاندلی کرنے پر مسلم لیگ ن سے تعلق رکھنے والے عرفان اللہ مروت کو نااہل قرار دے دیا تھا، جس کے باعث پی ایس 114 میں ان کی خالی ہونے والی نشست پر ضمنی الیکشن کرایا جا رہا ہے، اس حوالے سے پولنگ کا وقت ختم ہونے کے بعد ووٹو کی گنتی کا عمل جاری ہے۔
خبر کا کوڈ : 652063
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

Pakistan
lagta he nagar gilgit me election nhi hoe koi report nhi aarhi islam times per
منتخب
ہماری پیشکش